معروف افسانہ نگار خالدہ حسین انتقال کر گئیں

اسلام آباد:معروف افسانہ نگار خالدہ حسین پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد میں انتقال کر گئی ہیں، خالدہ حسین کا اصل نام خالدہ اصغر ہے اور وہ 18 جولائی 1938ء کو لاہور میں پیدا ہوئیں۔ والد ڈاکٹر اے جی اصغر انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور کے وائس چانسلر تھے۔ 1954ء میں افسانہ نگاری کا آغاز کیا۔ افسانوں کے کئی مجموعے شائع ہوچکے ہیں جن میں پہچان، دروازہ، مصروف عورت، ہیں خواب میں ہنوز اور میں یہاں ہوں کے نام شامل ہیں۔ ایک ناول ’’کاغذی گھاٹ‘‘ بھی تحریر کیا۔ اسلام آباد میں قیام پذیر تھیں ۔حکومت پاکستان نے انہیں 14 اگست 2005ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا۔
خالدہ حسین کی وفات پر ملک بھر کے ادیبوں نے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے ان کی ادبی خدمات پر انہیں زبردست خراج تحسین پیش کیا ہے، تعزیت کرنے والوں میں عبدالحمید شاہد، حمید قیصر، وقار زیدی،ابن آس، ریذیڈنٹ ڈائریکٹر اکادمی ادبیات کراچی قادر بخش سومرو، ریاض ساغر، سعید اشعر، افضل ہزاروی، محسن سلیم، شبیر نازش، مایا مریم، کامی شاہ اور محمد ریاست شامل ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں